مخصوص احادیث کے بارے میں شبہات

كيا اسلام میں حد رجم (سنگ سار كرنا) مشكوك ہے؟

بعض حضرات كہتے ہیں کہ حد رجم مشكوك ہے کیوں کہ یہ معلوم نہیں ہوسکا کہ آنحضرت ﷺ نے رجم کا حكم سوره نور كی آیت کے نزول سے پہلے دیا یا بعد میں:
الزَّانِيَةُ وَالزَّانِي فَاجْلِدُوا كُلَّ وَاحِدٍ مِّنْهُمَا مِائَةَ جَلْدَةٍ   ( سورۃ النور:2 )
ترجمہ: جو زنا کرنے والی عورت ہے اور جو زنا کرنے والا مرد ہے، سو دونوں میں سے ہر ایک کو سو کوڑے مارو۔

رمضان ميں شیطان قید ہونے کے باوجود گناہ کیوں؟

جنات اور شیاطین ہمارے لیے غیب ہے، جس طرح ہم وحی کی بنیاد پر ان کے وجود پر ایمان لاتے ہیں، بالکل اسی طرح وحی میں  ان کے بارے میں دی جانے والی خبروں پر بھی ایمان لانا ضروری ہے۔ اس حدیث میں رمضان میں شیاطین کو زنجیروں میں جکڑنے کے بارے میں خبر دی گئی ہے۔ لہٰذا غیب پر ایمان لانے کا تقاضا یہ ہے کہ اس بات پر بھی ایمان لایا جائے۔

بکری کا قرآنی آیات کھا جانا

جب یہ ثابت ہو گیا کہ بکری کا قرآنی آیات کے کھانے والا قصہ درست نہیں تو  اس حدیث کا قرآنی آیت کے ساتھ ٹکرانے کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا کیونکہ کسی بھی دو چیزوں میں ٹکراؤ ثابت کرنے سے پہلے ان کا ثابت ہونا ضروری ہے۔

کھانے کے بعد انگلیاں چاٹنا اور عرفِ عام

انسان کے کھانا کھانے کی دو صورتیں ہیں، ایک یہ کہ وہ اکیلا کسی برتن میں کھائے، دوسری یہ کہ ایک برتن میں ایک سے زیادہ لوگ کھائیں؛ پہلی صورت میں انگلی چاٹنے میں کوئی ناپسندیدگی یا کراہت کا سوال نہیں، البتہ دوسری صورت میں سنت طریقہ یہ ہے کہ کھانے سے فارغ ہونے کے بعد انگلی چاٹے کیونکہ دورانِ کھانا چاٹنے سے اس کی انگلی پر جو لعاب دہن لگا ہوگا وہ دوبارہ کھانے میں جائے گا جس سے ساتھ کھانے والے کراہت محسوس کریں گے۔ اس سے ظاہر ہوتا ہے کہ اگر سنت پر درست طریقہ سے عمل کیا جائے تو کوئی کراہت والی بات نہیں

گائے کے گوشت میں بیماری اور میڈیکل سائنس

وضاحت شبہ : بعض احادیث میں آتا ہے کہ گائے کے گوشت میں بیماری ہے، جبکہ یہ بات میڈیکل سائنس کے خلاف ہے۔   جوابِ شبہ پہلی بات : گائے کے گوشت میں بیماری کے بارے میں مختلف صحابہ سے احادیث مروی ہیں، جن میں ملیکہ بنت عمرو اور جناب عبداللہ بن مسعود رضی اللہ…

ابو طالب کے عذاب میں کمی کیوں؟

وضاحت شبہ: ایک حدیث میں آتا ہے: جناب عباس بن عبدالمطلب سے روایت ہے، کہ انہوں نے کہا: اے اللہ کےرسول! کیا  آپ نے ابو طالب (نبى ﷺ کے چچا)  کو کچھ نفع پہنچایا؟ وہ ہر طرف سے آپ کا دفاع کرتے تھے، اور آپ کی خاطر غضب ناک ہوتے تھے۔ آپ  ﷺنے جواب دیا:…

سیدنا معاویہ رضی اللہ عنہ شراب کے حرام ہونے کے بعد بھی شراب پیتے تھے (معاذاللہ)

بعض جہلاء نے سیدنا معاویہ رضی اللہ عنہ کے بارے میں یہ بہتانِ شنیع لگایا کہ وہ اسلام لانے کے بعد بھی شراب پیتے تھے۔ (معاذاللہ ) اس بہتان کو ثابت کرنے کے لیے وہ جس روایت سے سہارا لیتے ہیں ہم اس روایت کی حقیقت قارئین کی خدمت میں پیش کریں گے ۔

جونیہ قبیلے کی خاتون كى نبی کریم ﷺ سے شادى پر اعتراضات كے جوابات

ايک حديث ميں ہے کہ آپ ﷺ سے جونى نامى قبيلہ كى خاتون سے شادى كی، ليكن پھر وہ  رشتہ قائم نہ رہا، اس  كى كيا وجہ بنى؟ اور  كيا آپ ﷺ نے واقعى نكاح كيا تھا يا یوں کہا تھا کہ اپنا نفس میرے حوالے کردو ؟ اسى طرح بعض ديگر اعتراضات جيسے اس حدیث میں  اس عورت کے نام  میں  تعارض ہے  (يعنى اس بارے ميں مختلف متضاد باتيں ملتى ہیں)،  بعض لوگ  یہ اعتراض بھی کرتے ہیں کہ  اس حدیث میں عورت  نے نبی کریم ﷺ کے بارے میں نازیبہ کلمات استعمال کیے،   یہ بھی اعتراض کیا جاتا ہے کہ ابو اسید رضى الله عنہ اس عورت کو اس کے محرم کے بغیر چھوڑنے کیوں گئے؟

کیا نبی ﷺ نے امیر معاویہ کے لیے بد دعا کی؟

حدیث میں ہے کہ نبی کریم ﷺ نے سیدنا معاویہ کو بلایا  وہ نہ آئے تو نبی کریم ﷺ نے فرمایا کہ اس (امیر معاویہ ) کا پیٹ نہ بھرے۔ ‘‘ اس حدیث سے معلوم ہوتا ہے کہ نبی کریم ﷺ نے امیر معاویہ کے لیے بد دعا کے کلمات  ارشاد فرمائے تھے۔
حدیث میں وارد الفاظ بد دعا نہیں بلکہ اہل عرب کے کلام میں اس قسم کے کلمات بطور محاورہ بول دیے جاتے ہیں ،   جيسا كہ عربى لغت كے علماء نے اس كى وضاحت كى.  ديكھیں: الشفاء للقاضى عياض (2/197)،   شرح النووى (16/152).

بنو اميہ كا ذكر حديث نبوىﷺ ميں

حضرت ابوہریرہ رضی اللہ عنہ نے کہا کہ میں نے سچوں کے سچے رسول کریم ﷺ سے سنا ہے ، آپ فرمارہے تھے کہ میری امت کی بربادی قریش کے چند لڑکوں کے ہاتھوں پر ہوگی ۔(صحیح بخاری:3605)
ابو ذر رضی اللہ عنہ سے مروی ہے کہ انہوں نے یزید بن ابی سفیان سے کہا: میں نے رسول اللہ ﷺ ‌سے سنا فرما رہے تھے: پہلا شخص جو میری سنت(طریقے)کو تبدیل کرے گا بنو امیہ میں سے ہوگا۔(مصنف ابن ابى شيبہ: 20/156،سلسلۃ الاحاديث الصحیحۃ:1749)
ان دونوں احادیث سے بظاہر یہ معلوم ہوتا ہے کے آپ ﷺ نے بنو امیہ کی مذمت فرمائی!

  • 1
  • 2